دین کے لیے جدو جہد کرنا

شیخ  الحدیث حضرت مولانا محمد زکریّا صاحب رحمہ اللہ نے ایک مرتبہ ارشاد فرمایا:

ہمارے بزرگوں کا مقولہ ہے جو ہماری انتہا کو دیکھے وہ ناکام اور جو ابتداء کو دیکھے وہ کامیاب، اس لیے کہ ابتدائی زندگی مجاہدوں میں گزرتی ہے اور اخیر میں فتوحات کے دروازے کھلتے ہیں، اگر کوئی ان فتوحات کو دیکھ کر آخری زندگی کو معیار بنائے تو وہ ناکام ہو جائےگا۔

اوپر والے جملے کو حضرت رحمہ اللہ نے بار بار دہرایا، اور ارشاد فرمایا۔ میرے پیارو ! اس پر غور کر لو، اور تمام بزرگوں کی زندگی میں اس کا مطالعہ کر لو۔ (صحبتے با اولیاء، ملفوظات حضرت شیخ مولانا محمد زکریّا رحمہ اللہ، ص۵۵)

Source: https://ihyaauddeen.co.za/?p=7393


 

Check Also

سب سے زیادہ قابل نفرت چیز تکبّر ہے

سب سے زیادہ نفرت کی چیز میرے ذہن میں تکبر ہے اتنی نفرت مجھے کسی گناہ سے نہیں جتنی اس سے ہے۔ یوں اور بھی بڑے بڑے گناہ ہیں جیسے زنا۔شرب خمر وغیرہ؛ لیکن۔۔۔